کیا عجب چاشنی ہے محؐمد کے شہر میں

Lyrics to ‘کیا عجب چاشنی ہے محؐمد کے شہر میں’:

نعت
کیا عجب چاشنی ہے محؐمد کے شہر میں
ہر چیز دیدنی ہے محؐمد کے شہر میں

نوری فرشتے طیبہ میں پھیلے ہیں چار سو
کیا خوب روشنی ہے محؐمد کے شہر میں

ہم سے گنہگاروں کی قسمت تو دیکھئے
جنت خریدلی ہے محؐمد کے شہر میں

اشکوں کی نہر وردِ محؐمد سے سینچ کر
سوغات بھیجنی ہے محؐمد کے شہر میں

محبوؔب کو بھی آقا غلامی کا شرف دے
خیرات مانگنی ہے محؐمد کے شہر میں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

error: Content is protected !!