لن ترانی


Lan Tarani Naseeb e Musa Thi

لَنْ تَرَانِیْ نصیبِ موسیٰ تھی
اُن کو جلوے دکھائے جاتے ہیں

وہ سرِ طور خود گئے، لیکن
عرش پر یہ بُلائے جاتے ہیں

رب نے سب کچھ عطا کیا اُن کو
پانے والے اُنھی سے پاتے ہیں
حق شناسی ہے فطرت مومن کی
جس کا کھاتے ہیں اُسی کا گاتے ہیں

علمِ غیبِ رسول کے منکر
اک حقیقت کو بھول جاتے ہیں
غیب مانا کہ راز ہے، لیکن
راز اپنوں سے کب چھپائے جاتے ہیں


صدر العلماء حضرت علامہ محمد تحسین رضا خاں بریلوی رحمۃ اللہ تعا لٰی علیہ

image_pdf ⇒ ⇒ Download PDF Format ⇐ ⇐image_print ⇒ ⇒ Print Naat Lyrics ⇐ ⇐

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

لن ترانی

error: Content is protected !!